121

سیف کرینہ کے دوسرے بیٹے کا نام سامنے آنے پر ایک بار پھرسوشل میڈیا پر ہنگامہ

ممبئی: بھارتی نواب سیف علی خان اور ان کی بیگم کرینہ کپور کے دوسرے بیٹے کا نام سامنے آنے پر ایک بار پھر سوشل میڈیا پر ہنگامہ کھڑا ہوگیا اور ٹوئٹر پر دونوں کو ایک بار پھر اپنے بیٹے کا مسلم نام رکھنے پر تنقید کا نشانہ بنایا جارہاہے۔

بالی ووڈ میں چھوٹے نواب سے مشہور اداکار سیف علی خان اور ان کی اہلیہ اداکارہ کرینہ کپور نے جب اپنے  بڑے بیٹے کا نام تیمور علی خان رکھا تھا تو اس وقت پورے بھارت میں ہنگامہ کھڑا ہوگیا تھا اورہندو انتہا پسندوں نے دونوں کو بیٹے کانام ’تیمور علی خان‘ رکھنے پر خوب تنقید کا شنانہ بنایا تھا۔
اس طرح کی صورتحال دوبارہ پیدا نہ ہو اسلیے جب سیف اور کرینہ کےدوسرے بیٹے کی پیدائش ہوئی تو انہوں نے کئی ماہ تک اپنے بیٹے کا نام اور تصویر میڈیا پر شیئر نہیں کی۔ تاہم دوسرے بیٹے کی پیدائش کے چند ماہ بعدیہ خبر سامنے آئی کہ انہوں نے اپنے دوسرے بیٹے کا نام ’’جے‘‘ رکھا ہے۔
saifkareenasecondson

لیکن اب بالآخر دونوں کے دوسرے بیٹے کا اصلی نام منظر عام پر آگیا ہے۔ حال ہی میں کرینہ کپور نے اپنی کتاب ’’کرینہ کپور خانز پریگنینسی بائبل‘‘ متعارف کروائی ہے۔ جس میں انہوں نے کتاب کے آخری صفحات تک اپنے دوسرے بیٹے کو ’’جے‘‘ کے نام سے پکارا ہے۔ لیکن کتاب کے  آخری صفحات کرینہ کے حمل کے دوران اور بعد کی تصاویرپر مشتمل ہیں۔ جن میں سے ایک تصویر کے کیپشن میں انہوں نے اپنے دوسرے بیٹے کا نام ’’جہانگیر علی خان‘‘ لکھا ہے۔ اور اسی کتاب  کے آخری صفحے پر کرینہ نے پہلی بار اپنے دوسرے بیٹے کی تصویر بھی ظاہر کی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: -   ہم، اسلام اور پاکستان

سیف اور کرینہ کے دوسرے بیٹے کا نام منظرعام پر آتے ہی ایک بار پھر بھارتی سوشل میڈیا پر اس نام کو لے کر ہنگامہ کھڑا ہوگیا اور بھارتی صارفین پھر سے دونوں کو تنقید کا نشانہ بنارہے ہیں۔ ایک صارف نے سیف علی خان پر تنقید کرتے ہوئے کہا تیموراور جہانگیر کے بعد شاید اگلا نام شاہجہاں اور اورنگزیب ہوسکتا ہے۔ سیف علی خان مغل بادشاہت کو زندہ کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔

کچھ لوگ سیف کرینہ کے دوسرے بیٹے کے نام کو لے کر سوشل میڈیا پر کی جانے والی تنقید پر طنز کررہے ہیں۔

کچھ لوگ تو کرینہ اور سیف کے دونوں بیٹوں کے نام سے اتنے نالاں نظر آئے کہ انہوں نے مغل بادشاہ جہانگیر کو سفاک قرار دیتے ہوئے کہا پہلے تیمور اور اب جہانگیر۔ واہ سیف اور کرینہ نے اپنے بیٹے کا نام ایک سفاک اور وحشی مغل بادشاہ کے نام پر رکھا ہے۔

کچھ لوگوں نے دونوں پر طنز کرتے ہوئے کہا سیف اور کرینہ اپنے تیسرے بیٹے کا نام ’’اورنگزیب‘‘ رکھنے کی منصوبہ بندی کررہے ہیں؟

ایک صارف نے کہا ایسا لگ رہا ہے جیسے کرینہ کپور اور سیف علی خان مغل حکمرانوں کی ٹیم بنائیں گے پہلے تیمور اب جہانگیر۔ ان کے اگلے بچے کا نام کیا ہوگا۔

ایک صارف نے غصے میں لکھا کرینہ کپور کی فلمیں دیکھتے رہیں تاکہ ان لوگوں کے پاس تیمور جیسے حملہ آوروں کو فروغ دینے کے لیے  پیسے کی کوئی کمی نہ ہو جنہوں نے ہندوؤں کا قتل عام کیا۔

یہ بھی پڑھیں: -   فتح خوش آئند مگر

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں